0

پاکستانی زیر انتظام کشمیرکوبہت جلد بھارت میں مدغم کیاجائیگا مہاراجہ ہری سنگھ کافیصلہ انصاف حقائق عوام کے مفاد میں مبنی تھا /روندررینا

سرینگر/26/اکتوبر/اے پی آئی بی جے پی کو ملک کے عوام کی ترجمان قرار دیتے ہوئے بھاریہ جنتا پارٹی کے سٹیٹ پریذیڈنٹ نے کہا وہ دن دورنہیں جب پاکستان زیرانتظام کشمیر جس پرزاتی قبضہ جمایاگیا اسپرقبضہ ہو گااوراس علاقے کے لوگ بھی آزاد شہریو ں کی حیثیت سے زندگی گزارے گے۔ مہارا جہ ہری سنگھ کے فیصلے کو جموں و کشمیرکے لوگوں میں مفید میں قرار دیتے ہو ئے کہاں کہ اس فیصلے نے یہ ثابت کردیاکہ مہاراجہ نے عوام کے مفادات کومدنظررکھتے ہوئے بھارت کے ساتھ اپنی وابستگی کی۔اے پی آئی نیوز کے مطابق بھارت کے ساتھ الحاق کے 75وی سال گرہ منانے کے سلسلے میں بھارتیہ جنتا پارٹی نے جموں و کشمیرکے مختلف علاقوں میں ریلیوں کاانعقادکیا۔جموں میں الحاق کے حق میں ریلی نکالی گئی جس میں بھارتیہ جنتا پارٹی کے کا رکنوں نے شرکت کی۔ریلی سے خطاب کرتے ہوئے بی جے پی کے سٹیٹ پریذیڈنت روندررینا نے مہاراجہ ہری سنگھ کے فیصلے کوتاریخی قراردیتے ہوئے کہا اس فیصلے نے یہ ثابت کردیاکہ جموں و کشمیرکے لوگوں کے مفادات کومدنظررکھتے ہوئے انہوں نے اپنی وابستگی بھارت کے ساتھ کیاآج اسکاہمیں ثمرمل رہاہے۔ انہوں نے کہاکہ وقت نے یہ ثابت کردیاکہ ان کافیصلہ صداقت پر مبنی تھا۔ ا نہوں نے کہا پاکستان نے جموں وکشمیرکے ایک حصے پرزبردستی اپناقبضۃ جمایاہے اور اس حصے کو پاکستان سے چھڑاکر بھارت میں شامل کرنے کے لئے اقدامات اٹھائے جائینگے جب پاکستان زیرانتظام کشمیربھارت میں مدغم ہوگا۔انہوں نے کہاکہ پاکستان نے ایک حصہ چین کوتحفے کے طور پردیاہے جو جموں کشمیرکے لوگوں کے ساتھ ناانصافی ہے۔انہوں نے چین پاکستان کاریکا ڈتوڑ کر جموں و کشمیرکے عوام کے ساتھ ناانصافی سے تعبیر کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان نے چین کے مفادات کوتحفظ فراہم کرنے کے جموں وکشمیرکے لوگوں کوقربانی کابکرابنالیا۔ الحاق کے حق میں نکالی گئی ریلی سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ پانچ اگست 2019کواسی طرح کافیصلہ وزیراعظم نریندر مودی نے بھی لیااور انہوں نے جموں و کشمیرکاخصوصی درجہ 30-35Aمنسوخ کر کے جموں و کشمیرکوبھارت میں مدغم کردیااور پچھلے چار برسوں سے جموں وکشمیرکی کایاپلٹ گئی ہے ایک نئے دورکاآغاز ہوا ہے امن ترقی او رخوشحال کی راہ پرگامزن ہے ڈراور خوف ختم ہوا ہے سنگباری قتل غارت گری آگ وآہن کاکھیل ختم ہوچکاہے اسکولوں کالجوں یونیورسٹیوں میں معمول کے مطابق درس وتدریس ہورہاہے۔ جموں و کشمیر میں زمینی سطح پربدلاؤ دیکھنے کومل رہاہے اور جس طرح سے مہاراجہ ہری سنگھ نے جموں وکشمیرکے عوام کے حق میں اپنی وابستگی بھارت کے ساتھ کی یہی نظریہ اپناتے ہوئے وزیراعظم نے جموں و کشمیرکاخصوصی درجہ واپس لے کر عوام کو ترقی خوشحالی امن کی راہ پرگامزن کیاہے۔انہوں نے کہاکہ آج جموں وکشمیرے لوگ مہاراجہ ہری سنگھ کواس بات پر خراج عقیدت اداکرتے ہیں کہ انہوں نے بھارت کے ساتھ الحاق کرکے اپنی دوراندیشی سیاسی بصیرت اور ایک بہترحکمران ہونے کاثبوت فراہم کیا۔ بھارت کے ساتھ الحاق کی 75وی سالگرہ پروادی کشمیر میں بھی کئی تقریبات کااہتمام کیاگیا جس میں بھارتیہ جنتاپارٹی کے لیڈروں ورکروں نے شرکت کرکے مہاراجہ ہری سنگھ کے فیصلے کوصحیح ٹھہراتے ہوئے کہاہم دنیاکی عظیم جمہوریت کے ساتھ جڑے ہوئے ہیں جہاں ہمیں عزت وقار کے ساتھ زندہ رہنے کاموقع فراہم کیاگیاہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں