0

بارہ مولہ پولیس نے نقلی سی بی آئی آفیسر کو حراست میں لیا لاکھوں روپیہ مالیت کا مالہ مسروقہ بھی برآمد کیا گیا:پولیس

سرینگر 5 نومبر//یو پی آئی // بارہ مولہ پولیس نے کنزر میں نقلی سی بی آئی آفیسر کو دھر دبوچ کر اس کے قبضے سے جعلی شناختی کارڈ اور مالہ مسروقہ برآمد کرکے ضبط کیا۔ یو پی آئی کے مطابق پولیس اسٹیشن کنزر میں وسن بانگل کے رہائشی فاروق احمد وانی نے تحریری طورپر شکایت درج کی کہ جعلسازوں کا ایک گروہ سرگرم ہو گیا ہے۔ انہوں نے شکایت میں بتایا کہ اس گروہ میں شامل کلیدی ملزم جاوید احمد راتھر نے سی بی آفیسر جتلا کراس کے بیٹے کو سرکاری نوکری دینے کا وعدہ کیا۔ انہوں نے بتایا کہ جوں ہی اس کے سامنے صورتحال واضح ہوئی ملزمان نے چوری کا سہارا لے کر اس کے گھر سے گیزر، بیڈ شیٹ، انوٹر، سی سی ٹی وی کیمرا، ایل سی ڈی اور دوسری قیمتی اشیاء چرانے کے ساتھ ساتھ چالیس لاکھ روپیہ کا چونا لگایا۔ تحریری شکایت موصول ہوتے ہی پولیس نے فوری کارروائی عمل میں لا کر سی بی آئی آفیسر ظاہر کرنے والے شخص کو جعلی دستاویزات سمیت دھر دبوچ کر سلاخوں کے پیچھے دھکیل دیا۔ پولیس کے مطابق ملزم کے قبضے سے سی بی آئی کا نقلی شناختی کارڈ اور مالہ مسروقہ برآمد کیا گیا ہے۔ پولیس نے عوام الناس سے اپیل کی ہے کہ وہ دھوکہ بازوں سے ہوشیار رہیں اور ایسے افراد کے بارے میں نزدیکی پولیس تھانے کے ساتھ رابط قائم کرئے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں