0

بھارت اور چین لداخ سرحدی تنازعات کو حل کرنے پر متفق ہندوستان برابری کی شرط پر اپنی دفاعی پوزیشن مضبوط کررہا ہے۔ فوجی سربراہ

سرینگر/03نومبر/وی او آئی//فوجی سربراہ جنرل منوج پانڈے نے جمعہ کے روز کہا ہے کہ بھارت اپنی دفاعی پوزیشن بہتر بنانے کی طرف خاصا توجہ دے رہا ہے کیوں کہ ملک کی سلامتی اور آزادی کو برقرار رکھنے کیلئے مضبوط دفاعی پوزیشن ناگزیر ہے۔ انہوں نے بتایا کہ چین کے ساتھ سرحدی تنازعہ اگرچہ حل تو نہیں ہوا ہے تاہم دونوں فریق اس بات پر متفق ہے کہ سرحدی تنازعات کے علاوہ دیگر معاملات باہمی طور پر حل کئے جائیں۔وائس آف انڈیا کے مطابق فوجی سربراہ نے بتایا ہے کہ بھارت اپنے دفاعی نظام کو بہتر بناکر برابری پر یقین رکھتا ہے۔ بھارتی فوج کے سربراہ جنرل منوج پانڈے نے جمعہ کو مشرقی لداخ میں چین کے ساتھ سرحدی تنازع کے پس منظر میں کہا کہ ہندوستان کا نقطہ نظر تمام اقوام کی خودمختاری اور علاقائی سالمیت کے احترام کے ساتھ ساتھ تنازعات کے پرامن حل اور بین الاقوامی قوانین کی پابندی پر زور دیتا ہے۔ چانکیہ ڈیفنس ڈائیلاگ میں ایک خطاب میں، جنرل پانڈے نے یہ بھی کہا کہ ہندوستان دنیا بھر میں نئے مقامات پر دفاعی ونگ قائم کر رہا ہے اور فوج دوست غیر ملکی شراکت دار ممالک کے ساتھ مشترکہ فوجی تربیت اور مشقوں کے دائرہ کار اور پیمانے کو بڑھانے کی خواہشمند ہے۔موجودہ جغرافیائی سیاسی ہلچل کا ذکر کرتے ہوئے، انہوں نے بین الاقوامی معاملات میں قومی سلامتی کی بڑھتی ہوئی اہمیت اور سخت طاقت کی ”تجدید کرنسی” کو نوٹ کرنے کی ضرورت پر زور دیا۔آرمی چیف نے مایوسی اور جغرافیائی سیاسی بہاو کے درمیان ہندوستان کو ”روشن جگہ“ قرار دیا۔ انہوں نے کہا کہ ہمارا نقطہ نظر تمام اقوام کی خودمختاری اور علاقائی سالمیت کے احترام، سب کی برابری، تنازعات کے پرامن حل، طاقت کے استعمال سے گریز اور بین الاقوامی اصولوں، قوانین اور ضوابط کی پابندی پر زور دیتا ہے۔آرمی چیف نے کہا کہ تمام اسٹیک ہولڈرز کو مثبت طور پر شامل کرنے کے لیے ہندوستان کا عزم گزشتہ برسوں سے ”غیر متزلزل اور پائیدار” رہا ہے۔’ ‘فوجی ڈومین میں ہم ابھرتے ہوئے کثیرالجہتی فن تعمیر میں اپنے کردار کو سمجھتے ہیں۔ ہم اپنی مشترکہ تربیت اور مشقوں، انٹرآپریبلٹی، ذیلی علاقائی نقطہ نظر اور دوستانہ غیر ملکی شراکت دار ممالک کے ساتھ بہترین طریقوں کے اشتراک کے دائرہ کار اور پیمانے کو بڑھانے کے خواہاں ہیں۔انہوں نے کہا کہ اپنے دفاعی تعاون کے فروغ کو تقویت دینے کے لیے، ہم دنیا بھر میں نئے مقامات پر دفاعی ونگ قائم کر رہے ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں