0

جموں و کشمیر ریاستی ٹیکس محکمہ نے آئی سی اے آئی کے ساتھ مفاہمت نامے پر دستخط کئے

مفاہمت نامے سے علم کے اشتراک ، صلاحیت کی تعمیر کیلئے زیادہ موثر ، شفاف اور منصفانہ بالواسطہ ٹیکس نظام قائم ہو گا ۔ ایل جی سنہا

جموں و کشمیر کی جی ایس ٹی آمدنی میں اضافہ قومی اوسط سے بہت زیادہ ہے ۔ لفٹینٹ گورنر

سرینگر یکم اکتوبر 2023 ء;247;

جموں و کشمیر کے ریاستی ٹیکس محکمہ نے آج لفٹینٹ گورنر مسٹر منوج سنہا کی موجودگی میں انسٹی ٹیوٹ آف چارٹرڈ اکاوَنٹنٹس آف انڈیا ( آئی سی اے آئی ) کے ساتھ ریاستی ٹیکس محکمہ کے افسران کی معلومات کے تبادلے اور صلاحیت بڑھانے کیلئے ایک مفاہمت کی یاداشت پر دستخط کئے ۔

اپنے خطاب میں لفٹینٹ گورنر نے جموں و کشمیر اسٹیٹ ٹیکس ڈیپارٹمنٹ اور آئی سی اے آئی کی طرف سے پیشہ وارانہ مہارت کے اعلیٰ معیارات کی تعریف کی ۔

انہوں نے کہا کہ آج دستخط کئے گئے ایم او یو نے آئی سی اے آئی اور جموں و کشمیر کے درمیان ایک نئی شراکت داری کا آغاز کیا ہے ۔

انہوں نے مزید کہا کہ مستقبل کی پالیسی سازی اور ٹیکس سے متعلق دیگر مختلف پہلووَں میں ریاستی ٹیکس کے محکمے کو آئی سی اے آئی کی حمایت اور مدد کاروبار اور معیشت میں آسانی کیلئے جاری اصلاحات کو تقویت دے گی ۔

لفٹینٹ گورنر نے جی ایس ٹی پر صلاحیت سازی کے پروگرام کے افتتاحی اجلاس میں ایماندار ٹیکس دہندگان کی جموں و کشمیر کی ترقی میں ان کے تعاون کی تعریف کی اور معیشت اور کاروبار کیلئے ساز گار ماحول پیدا کرنے کیلئے حکومت کی کوششوں کا اشتراک کیا ۔

لفٹینٹ گورنر نے کہا کہ جموں کشمیر کی جی ایس ٹی آمدنی میں اضافہ قومی اوسط سے بہت زیادہ رہا ہے اور ہمارے پاس مستقبل کے امکانات کے بارے میں پراعتماد ہونے کی وجوہات ہیں جن کی وجہ سے ہم نے سماجی مساوات کے ساتھ اقتصادی ترقی کو تیز کرنے کیلئے گذشتہ چند برسوں میں اصلاحات کی ہیں ۔

انہوں نے کہا ’’ نئی پالیسیوں ، گورننس میں زیادہ شفافیت اور کرونیزم کے خلاف کریک ڈاوَن نے کاروباری اداروں ، صنعتوں اور نئے دور کے کاروبار کو ترقی کرنے کے قابل بنایا ہے ۔ ہم نے معیشت کو مزید مسابقتی بنانے ، ٹیکس کی بنیاد کو بڑھانے ، تعمیل کرنے اور شہریوں اور حکومت کے درمیان اعتماد کو مضبوط بنانے پر بہت زور دیا ہے ۔ ‘‘

لفٹینٹ گورنر نے ہر ضلع میں ٹیکس کی ادائیگی کے عمل کو ہموار اور دوستانہ بنانے اور ٹیکس نظام کے بارے میں بیداری پھیلانے کیلئے ریاستی محکمہ ٹیکس کی تعریف کی ۔

انہوں نے محکمہ اور یو ٹی کے شہریوں پر زور دیا کہ وہ صنعت کاری کو آگے بڑھانے اور جموں و کشمیر کو وکشت بھارت کے انجنوں میں سے ایک بنانے میں تعمیری کردار ادا کریں ۔

لفٹینٹ گورنر نے یو ٹی میں اپنے سینٹر آف ایکسیلنس کے قیام کیلئے آئی سی اے آئی کو انتظامیہ کی طرف سے تمام ضروری تعاون کا یقین دلایا ۔

لفٹینٹ گورنر نے جی ایس ٹی ایکٹ اور رولز کا نظر ثانی شدہ ایڈیشن جاری کیا اور ’ میرا بل میرا ادھیکار ‘ مہم کے تحت صارفین کو مبارکباد دی ۔

اس موقع پر چیف سیکرٹری ، پرنسپل سیکرٹری فائنانس ، کمشنر اسٹیٹ ٹیکس ڈیپارٹمنٹ ، نائب صدر آئی سی اے آئی ، چئیر مین جی ایس ٹی اور بالواسطہ ٹیکس کمیٹی ، وائس چئیر مین جی ایس ٹی اور بالواسطہ ٹیکس کمیٹی ، سینئر افسران ، آئی سی اے آئی کے اراکین ، ٹریڈ اینڈ انڈسٹری ایسوسی ایشن کے نمائندے اور تعلیمی اداروں کے سربراہان نے شرکت کی ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں