0

جموں و کشمیر میں اسمبلی انتخابات جلد ہوں گے،جیسے حلقہ بندی اور ووٹر لسٹ کی تیاری کا عمل مکمل ہو گیا

جموں و کشمیر میں امن اور ترقی کا ایک نیا دور شروع ،خطے کے نوجوانوں کو با اختیار بنایا جا رہا ہے; ترون چھگ

مرکز کے زیر انتظام علاقہ جو کبھی ’’ملی ٹنسی کی راجدھانی‘‘کے طور پر جانا جاتا تھاسیاحت اور ترقی کے مرکز میں تبدیل ہو گیا

سرینگر;17اکتوبر;ایس این این;جموں کشمیر میں جلد اسمبلی انتخابات منعقد ہونگے کا دعویٰ کرتے ہوئے بی جے پی کے قومی جنرل سیکرٹری اور جموں کشمیر انچارج ترون چھگ نے کہا کہ جموں و کشمیر میں امن اور ترقی کا ایک نیا دور شروع ہوا ہے اور خطے کے نوجوانوں کو با اختیار بنایا جا رہا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ جموں اور کشمیر میں سیکورٹی کی صورتحال میں بڑی تبدیلی آئی ہے اور مرکز کے زیر انتظام علاقہ، جو کبھی ’’ملی ٹنسی کی راجدھانی‘‘کے طور پر جانا جاتا تھا، سیاحت اور ترقی کے مرکز میں تبدیل ہو گیا ہے ۔ سٹار نیوز نیٹ ورک کے مطابق جموں میں ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے بی جے پی کے قومی جنرل سیکرٹری اور جموں کشمیر انچارج ترون چھگ نے حال ہی میں منعقد ہونے والے لداخ خود مختار پہاڑی ترقیاتی کونسل (کرگل) کے انتخابات میں بی جے پی کے ووٹوں کے حصہ کے ساتھ ساتھ سیٹوں کی گنتی میں اضافہ کا دعوی کرتے ہوئے کہا کہ جموں و کشمیر میں اسمبلی انتخابات ہوں گے ۔ جیسے ہی حلقہ بندی اور ووٹر لسٹ کی تیاری کا عمل مکمل ہو گیا ہے ۔ انہوں نے یہ بھی دعویٰ کیا کہ بلدیاتی انتخابات میں شکست کا سامنا کرنے والے گپکر اتحاد کو اسمبلی انتخابات میں بھی ایسا ہی نتیجہ بھگتنا پڑے گا ۔ میڈیا سے بات کرتے ہوئے انہوں نے کہا ’’الیکشن وقت پر ہوں گے ۔ کئی دہائیاں بغیر کسی حد بندی کے گزر گئیں ۔ اب اسمبلی حلقوں کی حد بندی ہوئی ہے ۔ ووٹر لسٹ تیار کر لی گئی ہے ۔ سیاسی جماعتوں کو ان کے اعتراضات جمع کرانے کیلئے بھیج دیا گیا ہے ۔ اس کے مطابق انتخابات جلد ہی ہوں گے‘‘ ۔ انہوں نے کہا کہ جہاں تک اربن لوکل باڈی (یو ایل بی) انتخابات کا تعلق ہے ۔ بلدیاتی اداروں نے وارڈ اور گرام پنچایت کی فہرستوں میں تضادات کا حوالہ دیتے ہوئے 700 تحریری شکایات پیش کی ہیں ۔ کرگل انتخابات کے بارے میں ایک اور سوال کا جواب دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ انتخابات میں ووٹروں کی تعداد میں ماضی کے مقابلے پانچ گنا اضافہ دیکھا گیا ۔ انہوں نے کہا ’’ہم نے صرف 16 سیٹوں پر الیکشن لڑا اور لوگوں سے مکمل آشیرواد حاصل کیا ۔ بی جے پی نے پچھلے انتخابات میں ایک کے مقابلے دو سیٹیں جیتی ہیں ۔ ‘‘جموں اور کشمیر میں سیکورٹی کی صورتحال پر بی جے پی لیڈر نے کہا کہ مرکز کے زیر انتظام علاقہ، جو کبھی ’’دہشت گردی کی راجدھانی‘‘کے طور پر جانا جاتا تھا، سیاحت اور ترقی کے مرکز میں تبدیل ہو گیا ہے ۔ دہشت گردی کی راجدھانی کے طور پر لیبل لگنے سے، جموں و کشمیر سیاحت کے مرکز میں تبدیل ہو گیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ جموں و کشمیر میں ترقی کا دور شروع ہو چکا ہے، ایک ایسا خطہ جو پچھلی حکومتوں نے دہائیوں تک ترقی سے محروم رکھا تھا ۔ چھگ نے کہا کہ جموں و کشمیر میں امن اور ترقی کا ایک نیا دور شروع ہوا ہے اور خطے کے نوجوانوں کو با اختیار بنایا جا رہا ہے ۔ انہوں نے کہا ’’سب سے اہم کامیابیوں میں سے ایک ملی ٹنسی کے خلاف ہمارا کامیاب کریک ڈاوَن ہے ۔ ہمارے شہریوں کو نقصان پہنچانے والوں کو کبھی معاف نہیں کیا جائے گا ۔ ‘‘

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں