0

جموں پولیس نے کیابشناکے وجوان کے قتل کامعمہ5روزمیں

جموں:۸۱، ستمبر: جے کے این ایس : جموں و کشمیر پولیس نے اتوار کے روز جموں شہر کے بشناعلاقے میں14ستمبرکو ایک نوجوان کے سفاکانہ قتل کامعمہ حل کرتے ہوئے ایک سرپنچ سمیت 4افرادکوگرفتار کرکے سلاخوں کے پیچھے دھکیل دیا۔جے کے این ایس کے مطابق ایس ایس پی جموں چندن کوہلی نے پیرکوجموںمیں ایک پریس کانفرنس میں بتایا کہ قتل کی لرزہ خیز واردات سنی سنسیا ولد بلدیو راج ساکنہ کوٹھے بلندے، چورلی بشنا، جس پر 14ستمبر کو کچھ نامعلوم افراد نے اس کی گھرمیں داخل ہوکر حملہ کیا اور وہ زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے چل بسا۔ایس ایس پی جموں نے کہا کہ ایس پی ہیڈ کوارٹر جموں رامنیش گپتا کی نگرانی میں پولیس ٹیمیں تشکیل دی گئیں اور پولیس ٹیموں نے سراغحاصل کرنے کے بعد تکنیکی شواہد اور انسانی انٹیلی جنس حاصل کرکے مختلف مشتبہ افراد کو گرفتار کیا۔ ایس ایس پی جموں چندن کوہلی نے کہا کہ مسلسل پوچھ گچھ کے دوران، ایک مشتبہ شخص سکھدیو سنگھ عرف مکھن، ساکن پلی گاو ¿ں بری برہمن ضلع سانبا نے اس گھناو ¿نے جرم کا اعتراف کیا اور اس نے دوسرے لوگوں کے ملوث ہونے کا بھی انکشاف کیا جنہوں نے لاجسٹک سپورٹ فراہم کی تھی، اور اس جرم میں استعمال ہونے والی گاڑیوں اور ہتھیاروں (ٹوکاس اور پستول) کو چھپایا تھا۔مزید تفتیش کے دوران چھینی گئی گاڑی بھی برآمد ہونے کے بعد جرم کا ارتکاب کرنے کے بعد مرکزی ملزم نے اپنے ساتھیوں کی تفصیلات بھی بتا دیں اور دن بھر مختلف مقامات پر چھاپوں کے بعد بالآخر پولیس4 ملزمان کو گرفتار کرنے میں کامیاب ہو گئی۔ انہوںنے کہاکہ قتل کی اس سنسنی خیز واردات میں ملوث وشامل 4 افراد کو گرفتار کر کے معاملہ حل کر لیا گیا ہے۔انہوں نے کہاکہ نوجوان کے قتل کیس میں سکھدیو سنگھ عرف مکھن ولد شمشیر جھنگ ساکنہ پلی گاو ¿ں وارڈنمبر9 بری برہمن ضلع سانبا دشانت کمار ولد جگجیون شرما ساکنہ پالی، سرپنچ یووراج سنگھ ولد چین سنگھ ساکنہ کلانہ ارنیا جموں اور ناصر خان ولد ببل خان ساکنہ بشنا جموں کوگرفتار کرکے سلاخوں کے پیچھے پہنچادیاگیا۔ایس ایس پی جموںنے مزیدکہاکہ کیس کی تفتیش جاری ہے اور مزید2 افراد کی گرفتاری کا امکان ہے۔ انہوں نے کہا کہ وہ گاڑی (موٹرسائیکل) جو جرم کے بعد جائے وقوعہ سے فرار ہونے کےلئے استعمال کی گئی تھی، بھی برآمد کر لی

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں