0

جموں کشمیر میں رواں مالی سال میں بجٹ کے تحت

نظرثانی شدہ تخمینہ اور آئندہ مالی سال بجٹ تخمینہ و تجاویز پر بحث شروع

سرینگر;22اکتوبر;ایس این این ;جموں کشمیر میں رواں مالی سال میں بجٹ کے تحت نظرثانی شدہ تخمینہ اور آئندہ مالی سال بجٹ تخمینہ و تجاویز پر بحث شروع ہوئی ہیں ۔ بحٹ پر بحث کے دوران سال2023;245;24 کے روینو(ٹیکسوں سے حاصل آمدنی) اور کیپٹل)سرمایہ کاری) کے نظر ثانی شدہ تخمینہ پر تبادلہ خیال ہورہا ہے ۔ 27اکتوبر تک جاری رہنے والے اس بجٹ بحث میں محکموں کو مشورہ دیا جاتا ہے کہ وہ بجٹ کے اعلانات پر تعمیلی رپورٹیں پیش کریں ۔ اس بحث میں ، اس کے علاوہ اسٹیبلشمنٹ بجٹ( کسی کام سے قبل لاگت کا خاکہ) اور مالی ذمہ داری اور بجٹ کے انتظام کے بارے میں مکمل تفصیلات محکمہ خزانہ کو بحث کے شیڈول کی تاریخ سے بہت پہلے پیش کریں گے ۔ بحث کے دوران محکمے عملے کے اعداد و شمار (منظور شدہ، جگہ پر، کنٹریکٹ وغیرہ)،گزشتہ پانچ سالوں کے دوران اسکیم کے لحاظ سے آمدنی اور سرمائے کے اخراجات کے رجحانات، محصولات کی وصولیاں اور ان میں اضافے کی گنجائش کے علاوہ بڑے منصوبوں کی تفصیلات پار پوائنٹ پرزنٹیشن کے ذریعے پیش کریں گے ۔ محکمہ خزانہ کے جوائنٹ ڈائریکٹر بجٹ شفاعت یحییٰ کے مطابق محکمہ جات پاور پوائنٹ پرزنٹیشن کے ذریعے اقدامات، جاری منصوبوں کے کل واجبات اس کے علاوہ آئندہ سال کیلئے حتمی ڈیڈ لائن یا پروجیکٹ سنگ میل آوَٹ پٹ ونتیجہ اور اہداف کے ساتھ آئندہ برس کے کلیدی خصوصیات کو بھی شامل کرتے ہیں ۔ جوائنٹ ڈائریکٹر بجٹ نے بتایا کہ اس بجٹ بحث میں محکمے صرف ان افسران کو شامل کریں گے جومحکمہ خزانہ میں اپنی متعلقہ بجٹ میٹنگ میں شرکت کریں جو نہایت ہی لازمی ہونگے جبکہ جموں میں تعینات محکموں کے سربراہان سول سیکرٹریٹ، جموں سے ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعے شرکت کریں گے ۔ 25 اکتوبر کو محکمہ باغبانی،ماہی پروری،پھولبانی،زراعت اور افزائش بھیڑ و جانور محکموں کے بجٹ پر بحث ہوگی جبکہ27 اکتوبر کو محکمہ خاطر و تواضع،محکمہ تعمیرات عامہ،محکمہ جنگلات،محکمہ اعلیٰ تعلیم اور محکمہ بجلی کے بجٹ پر بحث ہوگی ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں