0

سری نگرمیںمختلف الزامات کے تحت نوجوان DSPکی گرفتاری

گھرکی تلاشی،کچھ اہم کاغذات اور آلات ضبط
ملزم ڈی ایس پی کا6روزہ ریمانڈ حاصل کیا،انکوائری کمیٹی تشکیل:پولیس
سری نگر:۱۲،ستمبر:جے کے این ایس : سری نگر پولیس نے جمعرات کو جموں و کشمیر پولیس کے ایک DSP رینک کے افسر کو مختلف الزامات کے تحت گرفتار کیا۔جے کے این ایس کوملی تفصیلات کے مطابق سری نگر پولیس کی ایک ٹیم نے منگل کے روز بی ایس این ایل ایکسچینج صنعت نگر سری نگر کے قریب ڈی ایس پی (کے پی ایس) کے گھر کی تلاشی لی۔ذرائع کی مانیں تو کچھ دستاویزات اور ایک لیپ ٹاپ کے علاوہ دیگر الیکٹرانک آلات بھی قبضے میں لے لئے گئے اور ایک کیس میں افسر سے پوچھ گچھ کی گئی۔ذرائع نے مزید بتایاکہ جمعرات کے روز، افسر کو سری نگر پولیس نے ایف آئی آر نمبر 149/2023 کے تحت تعزیرات ہند کی دفعہ 167، 193،201، 210، 218، 221 اور 7،7 اے بدعنوانی ایکٹ کے تحت پولیس اسٹیشن نوگام میں باضابطہ طور پر گرفتار کیا اور مزید تفتیش کی جارہی ہے۔دریں اثناءجموں و کشمیر پولیس نے باضابطہ طور پر ڈی وائی ایس پی شیخ عادل کی گرفتاری کی تصدیق کی ۔کشمیرزون پولیس نے ایکس پرایک پوسٹ کیا ،جس میں کہاگیاکہ ڈی ایس پی عادل مشتاق کودرج ایف آئی آر کے تحت حراست میں لیاگیا،اورپولیس نے ملزم ڈی ایس پی کا6روزہ ریمانڈ حاصل کیا۔مزید برآں ایس پی ساو ¿تھ سٹی کی سربراہی میں 5 رکنی ایس آئی ٹی کو جانچ کی ذمہ داری سونپی گئی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں