0

سیاحت کا شعبہ جلد ہی جموںو کشمیر کی ترقی کا انجن بن جائے گا۔ منوج سنہا

کپواڑہ، 10 ستمبر۔۔ جموںو کشمیر کے لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا نے آج وادی بنگس کا دورہ کیا اور ’’بنگس ایڈونچر فیسٹیول‘‘ کا افتتاح کیا۔اپنے خطاب میں لیفٹیننٹ گورنر نے جموں کشمیر آنے والے سیاحوں کا خیرمقدم کیا۔ ہم ’اتیتھی دیو بھو‘ کے نعرے سے جیتے ہیں، جو ہماری ثقافت میں بھی گونجتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ مجھے امید ہے کہ آپ سب اس خوبصورت وادی بنگس کے اپنے دورے سے یادگار یادیں لے کر جائیں گے جو ایک بہترین آف بیٹ منزل کے طور پر ابھری ہے۔ انہوں نے کہا کہ جموں و کشمیر کے کئی آف بیٹ مقامات جیسے بنگس تفریحی مہم جوئی اور دلکش تجربات کے خواہشمند مسافروں کے لیے بہترین مقامات ہیں۔ یہ وادی ایڈونچر، شاندار کھانا، زیارت، روایتی دستکاری سے لے کر پرسکون پہاڑوں تک، جموں کشمیر مسافروں کو ہر چیز اور سب کچھ پیش کرتا ہے۔انہوں نے کہا کہ یہ میلہ بنگس وادی کی دیہی اور ایڈونچر سیاحت کی صلاحیت کو مزید اجاگر کرے گا، اس کی قبائلی ثقافت کو فروغ دے گا اور مقامی کاریگروں کو روایتی فنون اور دستکاری کی نمائش کے لیے ایک پلیٹ فارم فراہم کرے گا۔لیفٹیننٹ گورنر نے جموں و کشمیر کی سیاحتی صلاحیت کو بھی اجاگر کیا اور یو ٹی کے سیاحتی شعبے کو فروغ دینے کے لیےیو ٹی انتظامیہ کی کوششوں کا اشتراک کیا۔ انہوں نے کہا کہ ہم نے سیاحت کی صنعت کو مکمل طور پر تبدیل کر دیا ہے اور جموں کشمیر کو سب سے امید افزا مقام کے طور پر رکھا گیا ہے۔ سیاحت کا شعبہ جلد ہی مرکز کے زیر انتظام علاقے کی ترقی کا انجن بن جائے گا۔انہوں نے کہا کہ یو ٹی انتظامیہ کا مقصد سیاحوں کے زیادہ سے زیادہ حصہ کو راغب کرنا اور سیاحوں، متلاشیوں اور فن سے محبت کرنے والوں کو زندگی بھر کا تجربہ فراہم کرنا ہے۔تقریباً 300 نئے مقامات بشمول ہیریٹیج سائٹس، آف بیٹ، ایڈونچر اور روحانی مقامات کو تیار کیا جا رہا ہے تاکہ سرگرمیوں، تہواروں، قدرتی مناظر، شاپنگ اور بی اینڈ بی (بیڈ اینڈ بریک فاسٹ) سے بھرپور گھریلو اور غیر ملکی سیاحوں کے لیے مختلف قسم کے گیٹ وے آپشنز فراہم کیے جا سکیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں