0

غریبوں کا کھانا کون ڈکار رہا ہے: نا اہل راشن کارڈ ہولڈروں کی چھان بین کے لیے جموں و کشمیر میں ٹی میں بنائی جائیں گی

سرینگر;20اکتوبر;وی او آئی;فوڈ سول سپلائیز اینڈ کنزیومر افیئر ڈپارٹمنٹ کو جموں و کشمیر میں غریبوں سے راشن لینے کے لیے نا اہل لوگوں کی مسلسل شکایات موصول ہو رہی ہیں ۔ اس کے پیش نظر محکمہ نے کشمیر کے ساتھ جموں ڈویڑن میں ایک تحقیقاتی ٹیم تشکیل دینے کا فیصلہ کیا ہے ۔ جموں کشمیر میں نا اہل راشن کارڈ ہولڈروں کی تحقیقات کے لیے ٹیم تشکیل دی جائے گی ۔ وائس آف انڈیا کے مطابق جموں و کشمیر میں نا اہل راشن کارڈ ہولڈروں کی شناخت کے لیے ٹی میں تشکیل دی جائیں گی ۔ فی الحال کشمیر ڈائریکٹر کی قیادت میں ٹیم راشن کارڈوں کی جانچ کر رہی ہے ۔ اب جموں میں بھی ایک الگ ٹیم تشکیل دی جائے گی ۔ دونوں ٹی میں محکمانہ سیکرٹری کی قیادت میں کام کریں گی ۔ فوڈ سول سپلائیز اینڈ کنزیومر افیئر ڈپارٹمنٹ کو جموں و کشمیر میں غریبوں سے راشن لینے کے لیے نا اہل لوگوں کی مسلسل شکایات موصول ہو رہی ہیں ۔ محکمہ نے نا اہل افراد کو کارروائی سے خبردار کیا ہے اور نا اہل افراد کو فوری طور پر اپنے کارڈ سرنڈر کرنے کی ہدایت کی ہے ۔ اس کے بعد بھی لوگ سرکاری راشن کا فائدہ اٹھا رہے ہیں ۔ اس کے پیش نظر محکمہ نے کشمیر کے ساتھ جموں ڈویڑن میں ایک تحقیقاتی ٹیم تشکیل دینے کا فیصلہ کیا ہے ۔ فی الحال شکایات موصول ہونے کے بعد کشمیر ٹیم تمام اضلاع کا دورہ کر کے نا اہلوں کی نشاندہی کر رہی ہے ۔ محکمہ کے اسپیشل سیکریٹری عبدالستار کی جانب سے جاری کردہ ہدایات میں کہا گیا ہے کہ جموں و کشمیر میں کارڈوں کی جانچ کے لیے علیحدہ ٹی میں تشکیل دی جائیں ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں