0

لداخ میں 13 گیگا واٹ کے قابل تجدید توانائی کے منصوبے کو منظوری

نئی دہلی، 18 اکتوبر (یو این آئی) حکومت نے مرکز کے زیر انتظام علاقے لداخ میں 20,773.70 کروڑ روپے کی تخمینہ لاگت سے 13 گیگا واٹ قابل تجدید توانائی کے منصوبے کے لیے گرین انرجی کوریڈور (جی ای سی) فیز II – بین ریاستی ٹرانسمیشن سسٹم (آئی ایس ٹی ایس) کو منظوری دی ہے۔
بدھ کو یہاں وزیر اعظم نریندر مودی کی صدارت میں کابینہ کمیٹی برائے اقتصادی امور کی میٹنگ میں اس سلسلہ کی تجویز کو منظوری دی گئی۔
میٹنگ کے بعد اطلاعات و نشریات کے وزیر انوراگ سنگھ ٹھاکر نے ایک پریس کانفرنس میں بتایا کہ لداخ میں گرین انرجی کوریڈور (جی ای سی) فیز II – 13 گیگا واٹ قابل تجدید توانائی کے منصوبے کے لیے انٹر اسٹیٹ ٹرانسمیشن سسٹم (آئی ایس ٹی ایس) پروجیکٹ کو منظوری دے دی گئی ہے۔
انہوں نے کہا کہ اس پروجیکٹ کو مالی سال 2029-30 تک شروع کرنے کا ہدف ہے، جس کی کل تخمینہ لاگت 20,773.70 کروڑ روپے ہوگی۔ اس میں مرکزی مالی امداد (سی ایف اے) پروجیکٹ لاگت کا 40 فیصد ہے یعنی 8,309.48 کروڑ روپے ہے۔

مسٹر ٹھاکر نے مطلع کیا کہ لداخ خطے کے پیچیدہ خطوں، منفی موسمی حالات اور دفاعی حساسیت کو مدنظر رکھتے ہوئے، پاور گرڈ کارپوریشن آف انڈیا لمیٹڈ اس پروجیکٹ کے لیے عمل آوری کرنے والی ایجنسی ہوگی۔ اس میں جدید ترین وولٹیج سورس کنورٹر (وی ایس سی) پر مبنی ہائی وولٹیج ڈائریکٹ کرنٹ (ایچ ڈی وی سی) سسٹم اور ایکسٹرا ہائی وولٹیج الٹرنیٹنگ کرنٹ (ای ایچ وی اے سی) سسٹم لگائے جائیں گے۔

انہوں نے کہا کہ لداخ میں پیدا ہونے والی اس بجلی کی ترسیل کے لیے ٹرانسمیشن لائن ہماچل پردیش اور پنجاب سے ہوتی ہوئی ہریانہ کے کیتھل تک جائے گی۔ یہاں اسے نیشنل گرڈ کے ساتھ ضم کیا جائے گا۔ لداخ کو قابل اعتماد بجلی کی فراہمی کو یقینی بنانے کے لیے لیہہ کے اس پروجیکٹ سے موجودہ لداخ گرڈ سے ایک انٹرکنکشن کا بھی منصوبہ ہے۔ جموں و کشمیر کو بجلی فراہم کرنے کے لیے اسے لیہہ-آلوسٹینگ-سری نگر لائن سے بھی جوڑا جائے گا۔ اس پروجیکٹ میں پانگ (لداخ) اور کیتھل (ہریانہ) میں 713 کلومیٹر ٹرانسمیشن لائنوں اور پانچ گیگا واٹ صلاحیت کے ایچ وی ڈی سی ٹرمینلز کا قیام شامل ہے۔

انہوں نے کہا کہ اس منصوبہ سے لداخ کے خطہ میں بجلی اور دیگر متعلقہ شعبوں میں ہنر مند اور غیر ہنر مند اہلکاروں کے لیے براہ راست اور بالواسطہ روزگار کے بڑے مواقع پیدا ہوں گے ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں