0

لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا اور مہاراشٹر کے وزیر اعلی ایکناتھ شندے نے کی فوجی کمانڈروں کے ہمراہ

کپوارہ میں شیواجی مہاراج کے مجسمے کی نقاب کشائی
شیواجی بہادری،ذہانت، اعلیٰ اخلاق ، صحیح طرز عمل اور فرقہ وارانہ ہم آہنگی کے سر چشمہ تھے:مقررین
کپوارہ:۷، نومبر: جے کے این ایس : لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا نے مہاراشٹر کے وزیر اعلی ایکناتھ شندے کےساتھ منگل کو جموں و کشمیرکے کپواڑہ ضلع میں چھترپتی شیواجی مہاراج کے مجسمے کی نقاب کشائی کی۔اس تقریب کے دوران مہاراشٹر کے ثقافتی امور کے وزیر سدھیر منگنٹیوار بھی موجود تھے۔جے کے این ایس کے مطابق ایل جی کے آفیشلX(سابقہ ٹویٹر)پرمنوج سنہا سے منصوب ایک پوسٹ میں لکھاگیاہے کہ میں (منوج سنہا)امی پونیکر اور ہندوستانی فوج کے41RR کو ان کے تاریخی اقدام کےلئے مبارکباد دیتا ہوں۔ لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا نے مزید کہاکہ عظیم شیواجی کا مجسمہ لوگوں اور فوج کے بہادروں کےلئے تحریک کا ذریعہ بنے گا۔پوسٹ میں آگے انہوںنے لکھاکہ عظیم جنگجو اور سوراجیہ کے بانی، شیواجی اعلیٰ اخلاق، صحیح طرز عمل اور تمام مذاہب اور فرقوں کے احترام کے سر چشمہ بھی تھے۔ منوج سنہا نے مزید کاہاکہ وہ ایک پیدائشی لیڈر تھے، جنہوں نے دشمن کے خلاف اپنی مسحور کن فتح کے ذریعے ہندوستان کی ایک نئی تاریخ رقم کی۔انہوں نے مزید کہاکہ اپنی فوجی ذہانت اور اخلاقی قوت کو روبہ عمل لاکر، شیواجی نے لاکھوں ہندوستانیوں کو متحرک کیا اور مراٹھا سلطنت کےلئے خودمختاری حاصل کی۔لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا نے کہا کہ ان کی آفاقی اور ابدی اقدار آج بھی متعلقہ ہیں اور سماجی مساوات اور پرامن بقائے باہمی کے راستے پر ہماری رہنمائی کر رہی ہیں۔لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا نے کہاکہ چھترپتی شیواجی مہاراج ملک کے ایسی ویر تھے ،جن میں بہادری کی سبھی چار اہم علامات موجود تھیں ۔انہوںنے کہاکہ آج بھی جہاں ملک کے لوگ چھترپتی شیواجی مہاراج کے مجسمے کو دیکھتے ہیں تواُن کے سینے فخر سے چوڑے ہوتے ہیں ۔منوج سنہا نے کہاکہ چھترپتی شیواجی مہاراج صرف ایک راجاہی نہیں تھے ،بلکہ وہ اعلیٰ اخلاق، صحیح طرز عمل اور تمام مذاہب اور فرقوں کے احترام کے سر چشمہ بھی تھے۔لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا نے اپنی تقریر کے دوران کہاکہ میری تجویز ہے کہ ہرسال 7نومبر کو چھترپتی شیواجی مہاراج کے دن کے طور پرمنایاجائے ۔انہوںنے کہاکہ میں فوج سے اپیل کرتاہوںکہ وہ ہرسال یہ دن منائیں ۔ اس موقعہ پرمہاراشٹر کے وزیر اعلی ایکناتھ شندے اورفوج نے سینئر کمانڈروںنے بھی اپنے خیالات کااظہار کیا ۔انہوںنے کہاکہ یہ شیواجی کی فوجی ذہانت اور اخلاقی قوت کاہی نتیجہ تھاکہ وہ ملک کی آزادی اورخودمختاری کی ایک علامت تھے ۔مقررین نے کہاکہ چھترپتی شیواجی مہاراج آج بھی بہادری کی ایک ایسی علامت ہے ،جو ہمیں اور ہماری فوج کو ملک دشمن عناصر وقوتوں کے ناپاک عزائم کو خاک میں ملانے کی قوت دیتی ہے ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں