0

ٹریفک قوانین کی خلاف ورزی کرنے والوں کے خلاف کارروائی

ضلع کولگام میں رواں برس اب تک 65 لاکھ سے زائدجرمانہ وصول، 26 ہزار سے زائد چالان
سرینگر/30 اکتوبر/وی او آئی//ٹریفک قوانین کی خلاف ورزی کرنے کی پاداش میں جنوبی ضلع کولگام/ قاضی گنڈ میں محکمہ ٹریفک نے رواں برس قصورواروں سے 65 لاکھ سے زائد رقم بطور جرمانہ وصول کرلی ہے جبکہ اس مدت میں 26 ہزار سے زائد چالا ن کئے گئے ہیں۔ اس دوران محکمہ نے لوگوں پر زور دیا ہے کہ وہ نابالغ بچوں کو گاڑیاں اور موٹر سائکل، سکوٹی چلانے کی اجازت نہ دیں کیوں کہ چھوٹے عمر کے بچوں سے ہی سڑک کے زیادہ حادثات رونماہورہے ہیں۔ وائس آف انڈیا کے نمائندے امان ملک کے مطابق جنوبی ضلع کولگام میں سڑک حادثات کی روک تھام کیلئے محکمہ ٹریفک کی جانب سے اقدامات ا ٹھائے جارہے ہیں اور ٹریفک قوانین کی خلاف ورزی کرنے والوں کے خلاف سخت کارروائی انجام دی جارہی ہے۔ اس دوران محکمہ ٹریفک کولگام نے ٹریفک قوانین کی خلاف ورزی کرنے والے قصورواروں سے رواں برس اب تک 65 لاکھ 23 ہزار 700روپے بطور جرمانہ وصول کئے ہیں۔ اس ضمن میں وی او آئی نمائندے امان ملک کے ساتھ بات کرتے ہوئے ڈی ایس پی ٹریفک کولگام، قاضی گنڈ مجید موسوی نے بتایاکہ ٹریفک قوانین کی خلاف ورزی کی پاداش میں رواں برس قصورواروں کے خلاف اب تک جنوری 2023 سے اب تک 26 ہزار2 سو 11چالان کئے گئے ہیں۔ جبکہ اس مدت میں 65 لاکھ سے زائد رقم بھی قصورواروں سے بطور جرمانہ وصول کی جاچکی ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ ٹرک ڈرائیوروں، گاڑی مالکان،سکوٹی،موٹر سائکل سواروں کے خلاف یہ کارروائی کی گئی ہے اور ٹریفک قوانین پرعمل نہ کرنے والوں کے خلاف آئندہ بھی اس طرح کی کارروائیاں جاری رکھی جائیں گی۔ اس دوران انہوں نے لوگوں سے کہا ہے کہ وہ نابالغ بچوں کو گاڑیاں اور موٹر سائکل و سکوٹی چلانے کی اجازت نہ دیں کیوں کہ ان کیوجہ سے سڑک حادثات کا گراف بڑھ چکا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ ایسے بچے ایک تو اپنی زندگی خطرے میں ڈال دیتے ہیں دوسرا ان سے دوسرے لوگوں کی زندگی بھی خطرے میں پڑ جاتی ہے۔ اس دوران انہوں نے سرینگر جموں شاہراہ پر سفر کرنے والے خواہشمند افراد سے بھی کہاہے کہ وہ ایڈوائزری پر مکمل عمل کریں اور ٹریفک نظام اوقات کار کا پتہ لگانے کے بعد ہی آگے سفر پر جائیں تاکہ آگے چل کر انہیں کسی طرح کی پریشانی کا سامنا نہ کرنا پڑے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں