0

پائین شہر میں سیکورٹی کے غیر معمولی انتظامات، ایس ایس پی نے سیکورٹی کا جائزہ لیا

سری نگر،29اکتوبر(یو این آئی)سری نگر کے عید گاہ علاقے میں ملی ٹینٹ حملے کے بعد سیکورٹی فورسز نے متعدد مقامات پر ناکے لگائے جہاں پر راہگیروں ، موٹر سائیکل سواروں کی تلاشی لی جارہی ہیں۔
معلوم ہوا ہے کہ پائین شہر میں سیکورٹی بندوبست کو مزید سخت کردیا گیا ہے۔
ایس ایس پی سری نگرآشیش کمار مشرا سینئر آفیسران کے ہمراہ فوری طورپر عید گاہ پہنچے اور حالات کا جائز لیا۔
ذرائع کے مطابق سماج دشمن عناصر کے منصوبوں کو ناکام بنانے کی خاطر شہر سری نگر میں سیکورٹی کے غیر معمولی انتظامات کئے گئے ہیں۔
ذرائع نے بتایا کہ اتوار کے روز شہر کے کئی علاقوں میں ناکہ چیکنگ کے دوران مسافروں، راہگیروں اور سکوٹی سواروں کی باریک بینی سے تلاشی لی گئی اور ان کے شناختی کارڈ چیک کئے جارہے تھے۔
ذرائع نے بتایا کہ پورے شہر میں سیکورٹی گرڈ کو مضبوط کیا گیا جبکہ سی سی ٹی وی کیمروں کے ذریعے مشکوک افراد پر نظر گزر رکھی جارہی ہیں۔
ذرائع کا کہنا ہے کہ پائین شہر میں جگہ جگہ سیکورٹی فورسز کی تعیناتی عمل میں لائی گئی ہے۔
سلامتی عملے کی جانب سے اہم شاہراوں اور چوراہوں پر ناکے لگا کر گاڑیوں کی باریک بینی سے تلاشی لی جارہی ہیں۔
دریں اثنا ذرائع نے بتایا کہ عید گاہ میں پولیس آفیسر پر حملے کے بعد سیکورٹی فورسز نے عید گاہ کے اندرونی علاقوں کو محاصرے میں لے کر بڑے پیمانے پر تلاشی آپریشن شروع کیا ہے۔
ذرائع نے بتایا کہ ایس ایس پی سری نگر آشیش کمارمشرا فوری طورپر جائے موقع پر پہنچے اور انہوں نے حالات کا جائزہ لیا ۔
معلوم ہوا ہے کہ ایس ایس پی سری نگر کے ہمراہ پولیس کے سینئر آفیسران بھی تھے ۔
بتادیں کہ اتوار کی سہ پہر ملی ٹینٹوں نے عید گاہ میں پولیس آفیسر پر نزدیک سے گولیاں چلائیں اور بعدازاں جنگجو وہاں سے فرار ہونے میں کامیاب ہوئے۔
ذرائع کا یہ بھی کہنا ہے کہ تاک میں بیٹھے ملی ٹینٹوں نے عید گاہ گراونڈ میں گھس کر پولیس انسپکٹر پر فائرنگ کی جس دوران پولیس آفیسر کے جسم میں کئی گولیاں یپوست ہوئیں ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں