0

کشمیرتا کنیاکماری ریل لنک اسمبلی انتخابات سے پہلے متوقع

پروجیکٹ ریلوے کی وزارت کے 100 دن کے ایجنڈے میں سرفہرست
متعلقہ ایجنسیوںکو زیرالتواءکام تیزی کیساتھ مکمل کرنے کی ہدایت:حکام
سری نگر:۴۱، جون: جے کے این ایس : کشمیر اور کنیا کماری کے درمیان ہمہ موسمی ریل رابطے کو یقینی بنانے کے لئے ریلوے کی مرکزی وزارت نے متعلقہ ایجنسیوں کو زیر التواءکام کو تیز کرنے اور جموں وکشمیرکے مرکز کے زیر انتظام علاقے میں اسمبلی انتخابات کے انعقاد سے قبل خدمات کو چلانے کو یقینی بنانے کی ہدایت دی ہے۔جے کے این ایس کے مطابق ذرائع کے حوالے سے میڈیا رپورٹس میں کہا گیا ہے کہ شمالی ریلوے، ادھم پور اور بارہمولہ کے درمیان وندے بھارت ٹرین چلانے کا بھی منصوبہ رکھتا ہے۔ یو ایس بی آر ایل کشمیروادی سے ہر موسم میں ریل رابطے کو یقینی بنائے گا۔وزارت ریلوے کے ذرائع کا حوالہ دیتے ہوئے،کہاگیاہے کہ تیز رفتاری سے چلنے والے بنیادی ڈھانچے سے متعلق منصوبے بشمول کشمیر سے کنیاکمرائی تک ریل رابطے کی تکمیل، وزیر ریلوے اشونی ویشنو کے تیار کردہ ایجنڈے کا حصہ ہیں۔ذرائع نے بتایاکہ مرکزی حکومت انتخابات سے پہلے کشمیر سے کنیاکماری تک ریل لائن کو آپریشنل کرنا چاہتی ہے، اور متعلقہ ایجنسیوں بشمول محکمہ ریلوے سے کہا گیا ہے کہ وہ روٹ پر زیر التواءکام کو تیز کرے۔ذرائع کی مانیں تو جموں و کشمیر میں اسمبلی انتخابات کا اعلان اگلے ماہ بجٹ اجلاس کے بعد کیا جا سکتا ہے۔ سپریم کورٹ کی آئینی بنچ نے پہلے ہی حکومت ہند کو جموں و کشمیر میں اس سال 30 ستمبر تک اسمبلی انتخابات کرانے کی ہدایت دی تھی۔وادی کشمیر سے ریل رابطہ این ڈی اے حکومت کا ایک طویل عرصے سے زیر التواءمنصوبہ ہے، اور یہ لوک سبھا انتخابات سے قبل تکمیل کی آخری تاریخ سے محروم ہے۔ یہ مسئلہ اب ریلوے کی وزارت کے 100 دن کے ایجنڈے میں سرفہرست ہے، مرکز جموں و کشمیر میں اسمبلی انتخابات کے اعلان سے پہلے اسے فعال بنانے کی کوشش کر رہا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں