0

14نومبر 2023 سے نوجنوری 2024تک کونسلروں پنچوں سر پنچوں کی میعاد مکمل ہونے جارہی ہے

میونسپل کارپوریشنوں پنچایتوں میونسپل کمیٹیوں او رکونسلروں کوچلانے کے لے اختیارات منتقل کئے جائےنگے

سرینگر;22اکتوبر;اے پی آئی14نومبر 2023 سے نوجنوری 2024تک میونسپل کمیٹیوں میونسپل کونسلوں میونسپل کارپوریشنوں کے کونسلروں کی میعاد ختم ہونے جارہی ہے ۔ میونسپل کمیٹیوں میونسپل کارپوریشنوں کے پریذیڈنٹوں میئروں ڈپٹی میئروں کے اختیارات کمشنروں اور ایڈمنسٹریٹیو افسروں کوسونپ دیئے جائے گے اور جب بلدیاتی اداروں کے الیکشن کرا ئے جائےنگے تب نئی منتخب ہونے والا انتظامیہ کواختیار دوبارہ سونپ دیئے جائےنگے ۔ فی ا لحال جموں وکشمیر میں بلدیاتی اداروں کے الیکشن کے بارے میں تزبزب اور غیریقینی صورتحال بنی ہوئی ہے ۔ او بی سیئز کو ریزرویشن کے بعد ہی بلدیاتی اداروں کے الیکشن کے امکانات ظاہر کئے جارہے ہیں ۔ اے پی آ ئی نیوز ڈیسک کے مطابق اقتدار کونچلی سطح پرمنتقل کرنے کے لئے کئی برسوں کے بعد اگرچہ اقداما ت اٹھائے گئے تھے تاہم اب ان اداروں میں منتخب ہوئے کونسلروں کی میعاد ختم ہونے جارہی ہے اگرچہ جموں و کشمیر میں بلدیاتی اداروں کے الیکشن کے لئے ہرطرح کے اقداما ت اٹھائے گئے تھے تا ہم عین موقعے پر الیکشن ملتوی ہونے کے امکانات بھی نظرآ رہے ہے اور وجوہات کچھ بھی ہو بلدیاتی اداروں کے الیکشن 2024کے پارلیمنٹ الیکشن سے پہلے ہونے کے امکانات موجود نہیں ہے ۔ بھارتیہ جنتا پارٹی کے سینئر لیڈروں جن میں روندررینا اشوک کول اور جگل کشوربھی شامل ہے نے بیانات دیتے ہوئے کہاکہ کونسلروں نے الیکشن کمشن آف انڈیا کوتحریری طور پر آگاہ کیاکہ ان کے وارڈوں کے نئی حدبندی کی جائے اس کے بعد الیکشن کرائے جائے ۔ بی جے پی کے ایک اور سینئرلیڈر امور کشمیر کے انچارج ترن چگ نے اس بات کی تصدیق کی کہ وارڈوں کی نئی حد بندی کے بعد بلدیاتی اداروں کے الیکشن کرا ئے جائےنگے ۔ ادھرکونسلروں کی میعا دختم ہونے کے بعد اختیارات میونسپل کارپوریشنوں کے کمشنروں کے پاس جائے گے ۔ میونسپل کمیٹیوں میونسپل کونسلوں میں پریذیڈنٹ یاچیئرمینوں کے اختیارات ایڈمنسٹریٹیو افسروں کوسونپ دیئے جائےنگے یہ بھی بتایاجارہاہے کہ بلدیاتی اداروں کے لئے شڈول کاسٹ شڈول ٹائب امیدواروں کے لئے ریزرویشن کامعاملہ حل ہونے تک بلدیاتی اداروں کے الیکشن نہیں ہونگے اب دیکھنایہ ہے کہ کیاوارڈوں کی نئی حدبندی ہوگی او راوبی سیئز کے لئے سیٹیں مختص کی جارہی ہے اسکے بعد بلدیاتی اداروں کے الیکشن ہونگے ۔ ادھر پنچایت الیکشن بھی نوجنوری کے بعد ہونے چاہئے تاہم فی الحال پنچایت الیکشن کے بھی 2024کے پارلیمنٹ الیکشن کا امکانات نہیں ہے سرپنچوں پنچوں کے اختیارات پنچایت سیکریٹری بلاک ڈیولپمنٹ سیکٹریوں اے سی ڈیئز کو سونپ دیئے جائےنگے ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں